امریکہ:نئے وزیر دفاع اور سی آئی اے کے سربراہ کی نامزدگی

| January 8, 2013 | 0 Comments

امریکی صدر براک اوباما نے منفی سیاسی بازگشت کے باوجود اپنی صدارت کی دوسری مدت کے لیے ایک سابق ریپبلکن سینیٹر چک ہیگل کو وزیر دفاع کے عہدے کے لیے نامزد کر دیا ہے۔

چک ہیگل پر الزام ہے کہ وہ اسرائیل مخالف اور ایران کے معاملے پر نرم رویہ رکھتے ہیں۔

صدر اوباما نے انسدادِ دہشتگردی کے معاملات کے لیے اپنے مشیر جان برینن کو امریکی خفیہ ادارے سی آئی اے کا نیا ڈائریکٹر نامزد کرنے کا اعلان بھی کیا ہے۔

جان برینن بھی سی آئی اے کی جانب سے دوران تفتیش کا سخت طریقۂ کار اپنانے اور عراق جنگ کے حوالے سے غلط انٹیلجنس معلومات فراہم کرنے کے معاملے میں جانچ پڑتال کے عمل سے گزر رہے ہیں۔

ان دونوں نامزدگیوں کی امریکی سینیٹ سے منظوری لازمی ہے۔

صدر اوباما نے وائٹ ہاؤس میں ایک پریس کانفرس میں سینیٹر چک ہیگل کو وزیر دفاع نامزد کرتے ہوئے کہا کہ’چک ہیگل ایسے رہنما ہیں جن کے ہمارے فوجی حق دار ہیں‘۔

انہوں نے چک ہیگل کے بارے میں مزید کہا کہ چک’ہمارے فوجیوں کے چیمپیئن‘ ہیں اور اس کے ساتھ وہ ان کی آزادانہ اور دو جماعتوں کے نقطۂ نظر پر مبنی سوچ کی قدر کرتے ہیں۔

امریکی صدر کا کہنا تھا کہ چک یہ جانتے ہیں کہ امریکی رہنمائی ناگزیر ہے لیکن وہ فوجی کارروائی کو آخری حل کے طور پر دیکھیں گے۔’سب سے اہم یہ کہ چک یہ جانتے ہیں کہ جنگ کوئی تصوراتی بات نہیں ہے‘۔

اس موقع پر سینیٹر چک ہیگل نے کہا کہ وہ اپنے پیش رو کے قائم کردہ معیار کے ساتھ رہنے کی کوشش کریں گے اور امریکہ کے اتحاد کو مستحکم کرنے کا عزم کرتے ہیں۔

چک ہیگل ایک آزادانہ رائے رکھنے والے سینیٹر کی شہرت رکھتے ہیں اور وہ موجودہ امریکی وزیر دفاع لیون پنیٹا کی جگہ لیں گے۔

Category: Arabic

Leave a Reply